ر زمینتم قتل کرو ہو کہ کرامات کرو ہو

در زمینتم قتل کرو ہو کہ کرامات کرو ہو

See full size image

رپبلکن  کے  نام

رومنی  کی   اور  راین  کی  سدا  بات  کرو  ہو                                                          تم   بات   کرو  ہو  کہ  خرافات  کرو  ہو                              سیدھی  سی  ھے  ایک  بات  سمجھنے  کی  مگر  تم                                                          حج  میں  تو  بنگالیوں  کو  بھی  مات کرو  ہو                              جو  خاصیت  بش  کی  تھی  وھی مٹ  کی  ھے  مٹی                                                          دونوں  کو  ملا  کر  یہ  کیا  پنچات  کرو ہو                              برک بھوج  کا راجا اور مٹ  گنگوا  ھے  تیلی                                                          تم مٹ  اور  اوباما  کو  کہاں  ساتھ  کرو  ہو                              ایک وقت جو اچھا تھا  وہ  اب بہت برا ھے                                                          ھیلتھ کیر  کی  بابت  میں  یہ  کیا بات کرو ہو                              ایران کا ایک بم ھے اوروں  کے  ہزاروں                                                          چیونٹی  میں  اور ھاتھی  میں  مساوات کرو ہو                              جو بات کہ لوگوں پہ ھے دن کی طرح روشن                                                          اس دن کی حقیقت کو بھی تم رات کرو ہو                              تم محلوں کے باسی تمہیں ھم سے کیا سروکار                                                          بات ان سے کرو جن سے تم سنگات کرو ہو                              جانے دو انیس  قصہ،  سنا ھے نہ  سنیگا                                                          دیوانے سے ھشیاری کی  کیا بات کرو ہو

اپنا تبصرہ بھیجیں