Tag: poem about beuty

  • اترا ہے ایک حسن قیامت کا شہر میں

    اترا ہے ایک حسن قیامت کا شہر میں

    ڈاکٹر جاوید جمیل   طوفاں ہر ایک دل میں ہے حسرت کا شہر میں اترا ہے ایک حسن قیامت کا شہر میں وعدوں کے انہدام کی تاریخ ہے طویل تعمیر کیا محل ہو محبت کا شہر میں ناراض ہوکے ہاتھ جھٹک کر چلے گئے فالودہ خوب نکلا ہے عزت کا شہر میں اندیشہ۶_ فساد سے…