Breaking News
Home / ادب / شعرو ادب / صحافت چھوڑ دی میں نے

صحافت چھوڑ دی میں نے

میں اخباری فقیروں میں نہیں خود کو سما سکتا 

ادب سے دل لگا کر گل،صحافت چھوڑ دی میں نے 
نقابوں میں چھپے چہرے ،شریفوں کی شرافت کے 
یہ زرداروں کی دنیا ہے ،سیاست چھوڑدی میں نے 

 

Check Also

………….میری بات بیچ میں‌رہ گئی

انتخاب عبدہ رحمانی شکاگو تیرے ارد گررد وہ شور تھا ، مری بات بیچ میں ...

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *



Enable Google Transliteration.(To type in English, press Ctrl+g)

Copy Protected by Chetan's WP-Copyprotect.
%d bloggers like this: