Home / حالات حاضرہ / خبریں / ’ 8 اکتوبر کو 11 ریلوے سٹیشنز ، 6 ریاستوں کے مندر بم دھماکوں سے اڑا دیں گے‘ بھارت کو دھمکی آمیز خط موصول ، نیا شوشہ چھوڑ دیا

’ 8 اکتوبر کو 11 ریلوے سٹیشنز ، 6 ریاستوں کے مندر بم دھماکوں سے اڑا دیں گے‘ بھارت کو دھمکی آمیز خط موصول ، نیا شوشہ چھوڑ دیا

’ 8 اکتوبر کو 11 ریلوے سٹیشنز ، 6 ریاستوں کے مندر بم دھماکوں سے اڑا دیں گے‘ بھارت کو دھمکی آمیز خط موصول ، نیا شوشہ چھوڑ دیا

بھارتی سیکیورٹی اداروں نے مقبوضہ کشمیر میں قابض فوج کے ظلم و بربریت سے توجہ ہٹانے کے لئے مقبوضہ کشمیر کی  جہادی تنظیم ’’جیش محمد‘ کے حوالے سے ایسا شوشہ چھوڑ دیا ہے کہ پورے بھارت میں سراسیمگی پھیل گئی ہے اور ہر شخص خوفزدہ  نظر آ رہا ہے۔

بھارتی نجی ٹی وی کے مطابق مقبوضہ کشمیر  کی معروف جہادی تنظیم نے بھارتی سیکیورٹی اداروں کو دھمکی دی ہے کہ جیش محمد کے مجاہدین 8 اکتوبر کو بھارت کے 11 ریلوے سٹیشنز اور  انڈیا کی 6  بڑی ریاستوں کے مندروں کو بم دھماکوں سے اڑا دیں گے ۔ بھارتی سیکیورٹی اداروں  کو یہ دھمکی جیش محمد مقبوضہ کشمیر کے مبینہ سیکٹر کمانڈر مسعود احمد نامی شخص نے خط کے ذریعے دی ہے ۔

دھمکی آمیز خط ہریانہ میں روہتک جنکشن کے سٹیشن سپرنٹنڈنٹ  کو ڈاک کے ذریعہ موصول ہوا  جس میں دھمکی دی گئی ہے کہ  8 اکتوبر کو 11 ریلوے سٹیشنز اور  6 بڑی ریاستوں میں واقع مندروں کو بم کے ذریعے اڈا دیا جائے گا ۔دھمکی آمیزخط میں روہتک جنکشن ، ریواڑی ، ہسار ، کروکشیتر ، ممبئی سٹی ، بنگلورو ، چنئی ، جے پور ، بھوپال ، کوٹا اور اٹارسی ریلوے اسٹیشنوں کے علاوہ راجستھان ، گجرات ، تمل ناڈو ، مدھیہ پردیش ، اترپردیش اور ہریانہ کے مندروں کو بم سے اڑانے کا ذکر کیا گیا ہے ۔

دھمکی آمیز خط کے ملنے کے بعد دہلی ڈویژن اور امبالہ میں واقع ریلوے ایس پی دفتر تک کے اہلکاروں میں افرا تفری مچ گئی ہےجبکہ سیکیورٹی اداروں نے ان ریلوئے سٹیشنز اور مندورں کی سیکیورٹی بڑھاتے ہوئے تحقیقات کا سلسلہ شروع کر دیا ہے ۔

 

Check Also

چار پولش فضائی مسافر دھمکی آمیز رویہ کی وجہ سے گرفتار

لندن سے ناروے کے شہر استوانگر کے ائیرپورٹ سولا جانے والی نارویجن پرواز میں چار ...

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Enable Google Transliteration.(To type in English, press Ctrl+g)

Copy Protected by Chetan's WP-Copyprotect.
%d bloggers like this: