Breaking News
Home / حالات حاضرہ / خبریں / ممبئی کے 50سالہ مسلمان ٹیکسی ڈرائیور نے ایسا انوکھا کارنامہ سرانجام دے دیا کہ آپ بھی انہیں داد دیئے بغیر نہ رہ سکیں گے

ممبئی کے 50سالہ مسلمان ٹیکسی ڈرائیور نے ایسا انوکھا کارنامہ سرانجام دے دیا کہ آپ بھی انہیں داد دیئے بغیر نہ رہ سکیں گے

ممبئی کے 50سالہ مسلمان ٹیکسی ڈرائیور نے ایسا انوکھا کارنامہ سرانجام دے دیا کہ آپ بھی انہیں داد دیئے بغیر نہ رہ سکیں گے 

حصول تعلیم کے لئے دین اسلام میں خصوصی احکامات دیئے گئے ہیں جبکہ کہتے ہیں کہ تعلیم حاصل کرنے کی کوئی عمر نہیں ہوتی ،اس بات کو سچ کر دکھایا ہے بھارتی شہر ممبئی کے ایک پچاس سالہ مسلمان ٹیکسی ڈرائیور فاروق شیخ نے جنہوں نے اپنے 22 سالہ بیٹے کے ہمراہ کامرس میں گریجویشن کی ڈگری حاصل کر کے سب کو حیران کر دیا ہے۔

بھارتی نجی ٹی وی کے مطابق ممبئی کے ناگپاڑہ علاقہ میں رہنے والے فاروق شیخ نے تعلیم چھوڑنے کے 30 برس بعد گریجویشن کی ڈگری حاصل کی ہے،خاص بات یہ ہے کہ فاروق شیخ اور ان کے22سالہ بیٹے حازم شیخ نے ایک ساتھ کامرس میں گریجویشن کی ڈگری حاصل کی ہے۔ فاروق شیخ نے مہاراشٹر کی یشونت راؤچوہان یونیورسٹی برائے فاصلاتی تعلیم سے کامرس کی ڈگری حاصل کی ہے۔ باپ کے اس انوکھے تعلیمی سفر میں ان کے بیٹے نے بھی ان کی کافی مدد کی۔30سال قبل سکول کی تعلیم کی تکمیل کے بعد گھر کے خراب حالات کی بنا پر فاروق شیخ کو اعلی تعلیم کے حصول کا موقع نہیں مل پایاتھا۔ پہلے انہوں نے کسی کمپنی میں کلرک کا کام کیا پھر کمپنی کے بند ہونے کے بعد ٹیکسی چلائی۔فاروق علی الصبح ٹیکسی لے کر تلاش رزق میں نکل جاتے ہیں اور شام میں پڑھائی کرتے ہیں۔ فاروق شیخ کے دوستوں کا کہنا ہے کہ ایک غریب چائے بیچنے والے لڑکے کی وکیل بننے کی کہانی نے فاروق میں اعلی تعلیم کا حوصلہ پیدا کیا۔فاروق شیخ نے اپنے بچوں کو اعلی تعلیم دلائی اور حالات کے سازگارہونے کے بعد خود بھی اعلی تعلیم حاصل کی۔ فاروق شیخ کے حوصلے بلند ہیں وہ بی کام کرنے کے بعد ایم کام میں داخلہ لینے کے خواہش مند ہیں۔ فاروق شیخ کے بلند حوصلے کی یہ کہانی ان افراد کے لئے ایک مشعل راہ ہے ، جو حالات سے لڑنے کی بجائے حالات کا رونا روتے ہیں۔

 

Check Also

دبئی میں مقیم پاکستانی خاندان جس پر 37 لاکھ درہم جرمانہ لگادیا گیا، لیکن پھر کیا ہوا؟ جان کر آپ بھی کہیں گے اللہ کے ہاں دیر ہے اندھیر نہیں

دیار غیر میں آدمی مصائب میں گھر جائے تو کسی جانب سے امید کی کرن ...

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Enable Google Transliteration.(To type in English, press Ctrl+g)

%d bloggers like this: